محسن داوڑ، علی وزیر اور منظور پشتین شرکاء سے کیا کہتے رہے؟ ہر کوئی دنگ رہ گیا

0 115

وانا(نیوز ڈیسک )عارف وزیر کی نماز جنازہ ان کے آبائی گاوں غواہ خواہ وانامیں ادا کی گئی جس میں ہزاروں کی تعداد میں لوگوں نے شرکت کی۔جنازہ ادا کرنے سے پہلے رکن قومی اسمبلی محسن داوڑ نے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ پختون سرزمین پر جاری جنگ سے پختونوں کو ناقابل تلافی نقصان پہنچا ہے۔اگر ریاست کی یہی پالیسی رہی تو پختون سرزمین پر مزید نفرت پیدا ہوجائے گی جو ہماری قومی وحدت کے لئے نقصان دہ ہے۔ قبائل وہ خطہ تھا جہاں سے ملک کے دفاع کے لئے عوام نے ہمیشہ بے تحاشا قربانیاں دی۔ہیں اور قبائل ملک پر اپنی جانیں نچھاور کرتے تھے لیکن دہشت گردی کی وجہ سے آج در بدر ہیں اور دہشت گردی کی جنگ سے کافی مصیبتیں اٹھاہیں۔عارف وزیر کے کزن ایم این اے علی وزیر نے اپنے خطاب میں کہا کہ میں یہاں آئے ہوئے تمام لوگوں کا شکریہ کرتے ہیں اور عوام سے وعدہ کیا کہ اگر ہمارے سارے کے مرد ختم ہوجائیں تو پھر بھی ہم اپنے موقف پر قائم رہیں گے اور پختون کے حقوق کے لئے آواز اٹھاتے رہیں گے۔پختون تحفظ موومنٹ کے سربراہ منظور پشتین نے کہا کہ قوم احمدزائی وزیر جرگے منعقد کرے اور آپس میں اتحاد واتفاق پیدا کرکے دہشت گردوں کو شکست دیں تاکہآپ کی آنے والی نسلیں پر امن زندگی گزار سکیں انھوں نے 5 مئی کو ملکی اور بین الاقوامی سطح پر احتجاجی مظاہرے منعقد کرنے کا اعلان کیا۔ مجمع سے آیاز وزیر اور تاج وزیر نے بھی خطاب کیا۔

Facebook Comments