نرسنگ اور پیرامیڈیکس کا شعبہ ڈاکٹرز کے یکساں اہمیت کا حامل ہے‘ شوکت یوسفزئی

0 112

پشاور(جنرل رپورٹر) صوبائی وزیر محنت اور ثقافت شوکت یوسفزئی نے کہا ہے کہ نرسنگ اور پیرامیڈیکس کا شعبہ ڈاکٹرز کے یکساں اہمیت کا حامل ہے۔ پاکستان تحریک انصاف اس صوبے میں پہلی حکومت ہے جس نے نرسنگ کی ترقی کے لیے فائیو ٹئیر فارمولا دیا جس سے اس شعبے کے لوگ بھی گریڈ 20 تک ترقی حاصل کر سکتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ مریض کی دیکھ بھال اور میں ڈاکٹر سے زیادہ وقت نرسنگ سٹاف گزارتا ہے نرسنگ اور پیرامیڈیکس کا بہترین اور پروفیشنل رویہ مریض کی صحتیابی میں اہم کردار ادا کرتا ہے۔ ڈاکٹر ایوب روز کی صوبائی ہیلتھ سروسز اکیڈمی اور صوبے میں نرسنگ اور پیرامیڈیکس کی ترقی، فروغ، ان کے مسائل کے حل اور بہتری کے لیے بے پناہ قربانیاں ہیں انہوں نے نرسنگ کے شعبے اور اس کو جدید خطوط پر استوار کرنے کے لیے شب و روز محنت کی۔ بطور ڈائریکٹر جنرل پی ایچ ایس اے ڈاکٹر ایوب روز کی خدمات کو فراموش نہیں کیا جا سکتا۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز ڈاکٹر ایوب روز کی ریٹائرمنٹ کے موقع پر منعقدہ الوداعی تقریب میں اظہار خیال کرتے ہوئے کیا۔ تقریب میں ڈاکٹرز نرسنگ سٹاف، پیرامیڈیکس اور دیگر نے شرکت کی۔ تقریب میں سماجی دوری اور ایس او پیز کا خاص خیال رکھا گیا۔ صوبائی وزیر نے کہا کہ صوبائی حکومت تعلیم اور صحت کے شعبے پر خاص توجہ دے رہی ہے کیونکہ ان دو شعبوں میں بہتری کے بغیر حقیقی ترقی اور تبدیلی نا ممکن ہے ہسپتالوں کی کارکردگی اور کوالٹی بہتر بنانے کیلئے ان کے مسائل حل کرینگے تاکہ غریب عوام کو صحت کی بہترین سہولیات فراہم ہوں کیونکہ ہسپتالوں میں زیادہ تر غریب مریض علاج کے لیے آتے ہیں ان غریب عوام مریضوں کے ساتھ بہترین رویہ رکھنا نرسنگ اور پیرامیڈیکس سٹاف کی ذمہ داری ہے۔ شوکت یوسفزئی نے ڈاکٹر ایوب روز کی خدمات کا اعتراف کرتے ہوئے کہا کہ وہ انتہائی ملنسار، تجربہ کار اور محنتی انسان ہیں جنھوں نے اس شعبے کی بہت خدمت کی ہے ڈاکٹر ایوب روز کو اپنے تجربے کا استمعال کرتے ہوئے ریٹائرمنٹ کے بعد بھی کسی نہ کسی طریقے سے اس شعبے کے ساتھ وابستہ رہنا چاہئے۔ صوبائی وزیر نے سرکاری نرسنگ سکولوں کے مسائل کے حل کی یقین دہانی کراتے ہوئے کہا کہ ان سکولوں کے خیبر میڈیکل یونیورسٹی کے ساتھ الحاق کے لیے وہ وزیر صحت کے ساتھ بات چیت کریں گے کیونکہ پرائیویٹ نرسنگ سکولوں کا کے ایم یو کے ساتھ الحاق ہو چکا ہے اور ابھی تک ان سرکاری نرسنگ سکولوں کا نہیں ہوا جبکہ یہاں پر موجودہ سہولیات کافی بہتر ہیں اور بہت سے پرائیویٹ نرسنگ سکولوں سے زیادہ ہے۔ اس سلسلے میں ان سرکاری نرسنگ سکولوں کے ساتھ بھرپور تعاون کیا جائے گا۔

Facebook Comments