عمران خان نے پاکستانی میڈیا کو سب سے بڑا سرپرائز دےد یا

0 146

اسلام آباد( نیوز ڈیسک) میڈیا انڈسٹری کی مشکلات کو کم کرنے کے لیے وفاقی حکومت نے میڈیا کے بقایاجات ادا کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ذرائع کے مطابق میڈیا کو درپیش مالی مشکلات کا ازالہ کرنے کے لیے وفاقی حکومت نے میڈیا کو 1.8 ارب روپے کے بقایاجات جاری کرنے کا فیصلہ کیا ہے.پی ٹی آئی حکومت کےذمے1.8 اربکےبقایاجات واجب الادا تھے جو حکومت نے اس کٹھن اور مشکل وقت کے تناظر میں میڈیا کو ادا کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ذرائع نے بتایا کہ واجب الادا رقم فوری طور پر میڈیا ہاؤسز کو جاری کی جائے گی۔چند روز قبل ملک میں کرونا وائرس کی وبا کے دوران میڈیا انڈسٹری اور ورکرز کے تحفظ کے لیے اقدامات کے پیش نظر وزیر اعظم عمران خان نے 5 رکنی کمیٹی قائم کی تھی۔کمیٹی شفقت محمود، فردوس عاشق اعوان، شہزاد اکبر اور شہباز گل پر مشتمل ہے، کمیٹی کو سفارشات کا جائزہ لینے اور مسائل کا حل نکالنے کا ٹاسک سونپ دیا گیا ہے۔اس حوالے سے وزیر اعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ کرونا وائرس کے درپیش چیلنج سے نمٹنے میں میڈیا کا کلیدی کردار ہے، کرونا وائرس کی صورت حال میں صحافی اور میڈیا ورکرز بھی ہر اول دستے کا کردار ادا کر رہے ہیں، ہم میڈیا ورکرز کا تحفظ، انڈسٹری کی مشکلات کم کرنے کی ہر ممکن کوشش کریں گے۔ دوسری جانب ایک خبر کے مطابق صوبائی دارالحکومت لاہور میں وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کی زیرصدارت رمضان پیکج پر اجلاس ہوا جس میں پنجاب حکومت نے کرونا کے پیش نظر رمضان بازار نہ لگانے کا فیصلہ کیا۔وزیراعلیٰ پنجاب نے رمضان میں عوام کو براہ راست ریلیف کی منظوری دیتے ہوئے کہا کہ عوام کو براہ راست کیش رقم ادا کی جائے گی۔سردار عثمان بزدار نے رقم کی شفاف تقسیم کا نظام وضع کرنے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ عوام کو ہر ممکن ریلیف دیا جائے گا۔یاد رہے کہ گزشتہ ہفتے لاہور میں وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدار کی زیرصدارت خصوصی کمیٹی کا اجلاس ہوا جس میں صوبے میں کرونا وبا کی صورتحال،حفاظتی اقدامات کا جائزہ لیاگیا تھا۔سردار عثمان بزدار کی زیرصدارت اجلاس میں فیصلہ کیا گیا تھا کہ صوبے میں دفعہ 144 کی خلاف ورزی برداشت نہیں کی جائے گی۔

Facebook Comments