کیا آپ جانتے ہیں کہ یہ پھول کس چیز سے بنے ہیں؟

0 86

ساؤ پالو: ان تصویروں میں دکھائی دینے والے پھول بظاہر اصلی لگتے ہیں لیکن درحقیقت یہ شکر سے بنے ہوئے ہیں اور انہیں کھایا جاسکتا ہے۔ یہ پھول برازیل کی لیوسیانا گونزالیز کے ہنر کا ثبوت ہیں جو آج سے تین سال پہلے تک بیکنگ کے بارے میں کچھ نہیں جانتی تھیں لیکن آج وہ مشہور ہوچکی ہیں۔

قصہ کچھ یوں ہے کہ لیوسیانا ایک سول انجینئر تھیں اور اپنے پیشے میں کامیاب بھی تھیں۔ لیکن 2017 میں وہ اس کام کا دباؤ برداشت نہ کرسکیں اور شدید بیمار پڑگئیں۔ تب تک انہیں کیک پیسٹریاں بنانا بالکل بھی نہیں آتا تھا۔

شدید بیماری کی وجہ سے وہ تین مہینے تک بستر سے لگی رہیں اور طبیعت سنبھلنے پر انہوں نے اپنے گھر کے سامنے واقع ایک اسکول جانا شروع کردیا جہاں کھانا پکانے اور بیکنگ کی تربیت دی جاتی تھی۔

وقت گزاری کےلیے انہوں نے وہاں سے کیک پیسٹریاں بنانا اور بیکنگ سیکھنا شروع کردیا؛ اور دیکھتے ہی دیکھتے اس میں انہیں بہت مزا آنے لگا۔

ان کی بنائے بنائے ہوئے کیک اور پیسٹریاں صرف مزیدار ہی نہیں ہوتے بلکہ سول انجینئرنگ کے شعبے میں اپنی مہارت استعمال کرتے ہوئے وہ انہیں خوبصورت بھی بنا دیتیں۔

جلد ہی وہ کیک پیسٹریوں پر لگانے کےلیے شکر سے بنے پھول اتنی مہارت سے تیار کرنے لگیں کہ جنہیں دیکھ کر اصل کا گمان ہوتا ہے۔ پھر انہوں نے اپنی مہارت کو مزید بڑھایا اور پھول پتیوں کے علاوہ، شکر سے مختلف پھل بھی تیار کرنے لگیں۔

آج ان کے بنائے ہوئے کیک نہ صرف ساؤ پالو میں بلکہ پورے برازیل میں اپنے ذائقے اور خوبصورتی کےلیے مشہور ہیں۔ پچھلے سال انہوں نے انسٹاگرام پر ’’لیوسیانا گونزالیز شوگر فلاور‘‘ کے نام سے اپنا پیج بنایا اور آج اس کے تقریباً 60 ہزار فالوورز ہیں۔

Facebook Comments