کراچی میں نشہ کر کے گاڑیاں چرانے والے 2 لڑکوں اور ایک لڑکی کی کہانی

0 83

کراچی(مانیٹرنگ ڈیسک) کراچی میں ماڈل پولیس سٹیشن فیروز آباد کی پولیس نے دو لڑکوں اور ایک لڑکی کو گرفتار کیا ہے جو نشے کے عادی تھے اور گاڑیاں چوری کرتے تھے۔ ویب سائٹ ’پڑھ لو‘ کے مطابق ایس ایس پی ایسٹ ساجد سدوزئی نے بتایا ہے کہ ملزمان میں شاہ رخ وجاہت اور سمیرا احسان شامل ہیں۔ تینوں ملزمان ایک ہنڈا سٹی گاڑی چوری کرکے لیجا رہے تھے کہ پولیس نے انہیں دھر لیا۔رپورٹ کے مطابق جب انہیں پکڑا گیا اس وقت بھی وہ تینوں نشے میں دھت تھے۔ ان کے قبضے سے دو پستول اور آئس پاﺅڈرسمیت دیگر منشیات بھی برآمد ہوئیں۔ پولیس کا کہنا تھا کہ یہ تینوں ملزمان ایک گینگ سے تعلق رکھتے ہیں جس کے اراکین کی تعداد 8سے 10تک ہے۔ شاہ رخ اور وجاہت ناظم آباد کے رہائشی ہے جبکہ لڑکی سمیرا سرجانی ٹاﺅن کی رہنے والی ہے۔ شاہ رخ اس سے قبل 2016ءاور 2017ءمیں بھی گرفتار ہو چکا تھا۔ دوسری طرف ایک خبر کے مطابق نجی کالج کے استاد نے میڈیکل سیکنڈ ایئر کی طالبہ کو مبینہ طور پر زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا۔پولیس کے مطابق طالبہ سے مبینہ زیادتی کا واقعہ 26 جون کو پیش آیا اور 28 جون کو طالبہ کے والد نے مقدمہ درج کرایا۔پولیس کا کہنا ہے کہ طالبہ کے والد محمد ارشد کی مدعیت میں مقدمہ درج کرکے ملزم کو گرفتارکرلیا ہے۔ایف آئی آر کے متن کے مطابق نجی کالج کے استاد نے طالبہ کو کالج میں کلاسز کے اجراکا کہہ کر بلایا اور دیگر طالبات کے نہ ہونے پر جب وہ واپس جانے لگی تو ٹیچر عادل حیات نے اسے روک لیا۔بائیولوجی کا ٹیچر عادل طالبہ کو گھر چھوڑنے کے بہانے اپنے فلیٹ پر لے گیا جہاں طالبہ کو 4 گھنٹے تک فلیٹ پر رکھا اور مبینہ زیادتی کا نشانہ بنایا۔مقدمے کے مطابق ملزم نے طالبہ کی ویڈیو بھی بنائی اور نیم بیہوشی کی حالت میں کالج گیٹ پر چھوڑ گیا۔

Facebook Comments