ڈیل آف دی سینچری سقوط بیت المقدس کی دستاویز ہے،اسے کسی صورت تسلیم نہیں کرتے،سینیٹرمشتاق احمد خان

0 105

پشاور(جنرل رپورٹ): امیر جماعت اسلامی خیبر سینیٹر مشتاق احمد خان نے کہا ہے کہ ڈیل آف دی سینچری سقوط بیت المقدس کی دستاویز ہے، اسے کسی صورت تسلیم نہیں کرتے، وزیر اعظم عمران خان ڈیل آف سینچری پر اپنی پوزیشن واضح کریں۔ ابھی تک وزیراعظم کی طرف سے بیت المقدس کو اسرائیل کو دینے کے امریکی اعلان پر کوئی ردعمل نہیں آیا۔بیت المقدس مسلمانوں کا ہے، اسے یہودیوں کے قبضے میں نہیں جانے دیں گے۔
ان خیالات کا اظہار انہوں نے شیرگڑھ میں جمعیت طلبہ عربیہ کے زیر اہتمام تقسیم انعامات کی تقریب ”ستوری د خیبر” سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ تقریب سے جمعیت طلبہ عربیہ کے جنرل سیکرٹری مولانا شمشیر شاہد اور منتظم صوبہ مفتی سیف اللہ رضوان سمیت جماعت اسلامی مردان کے رہنما فضل ربانی ایڈووکیٹ اور شیخ الحدیث مولانا صفی اللہ نے بھی خطاب کیا، سینیٹر مشتاق احمد خان نے کہا کہ مدارس اسلام کے مضبوط قلعے ہیں، مدارس کو امریکی نظر سے دیکھنے کی مذمت کرتے ہیں۔
مدارس کے نصاب کو یونیورسٹی آف نبراسکا سے جوڑنے والے امریکی ایجنٹ ہیں۔ جب غیر ملکی این جی اوز کو رجسٹریشن کی اجازت ہے تو حکومت دینی مدارس کو رجسٹریشن کی اجازت کیوں نہیں دے رہی؟انہوں نے کہا کہ افسوس کی بات ہے کہ گلوکاروں اور اداکاروں کو تو اعلیٰ قومی اعزازات دیئے جاتے ہیں لیکن مدارس کے علماء کو کوئی پرائڈ آف پرفارمنس نہیں دیا جاتا۔ مدارس لاکھوں بچوں کو مفت تعلیم فراہم کررہے ہیں، حکومت بجٹ میں مدارس کا بھی حصہ رکھے۔
انہوں نے کہا کہ پاکستان اور امت مسلمہ پر امریکی غلاموں کی انجمن کی حکومت ہے۔ یہ حکمران امریکی مفادات کے تحفظ اور امت کو امریکی غلامی میں دینے کے لئے سرگرم ہیں۔ جب تک ان امریکی غلاموں سے نجات حاصل نہیں کی جاتی امت اسی طرح تباہ حال اور بکھری ہوئی رہے گی۔انہوں نے کہا کہ جمعیت طلبہ عربیہ تحریک اسلامی کا مستقبل ہے، اسلامی تحریک کو طلبہ عربیہ سے توقعات ہیں، طلبہ عربیہ کے نوجوان معاشرے کی اصلاح کریں اور اس کے لئے مسلسل کوشش کریں۔ قرآن و سنت کا گہرا علم اور جدید علوم میں دسترس حاصل کریں اور اتحاد و اتفاق کا درس دیں، امت کو سیسہ پلائی دیوار بنادیں۔
فرقہ واریت اورمسلکیت کے مقابلے میں اتحاد و اتفاق کی فضا پیدا کریں۔ ۔سینیٹر مشتاق احمد خان نے مزید کہا کہ موجودہ حکومت نے معیشت کی بینڈ بجادی ہے۔ اس وقت ملکی معیشت آئی سی یو میں ہے۔ حکومت کے پاس معیشت کو سنبھالا دینے کے لئے کوئی منصوبہ نہیں ہے ، یہی وجہ ہے کہ چیئرمین ایف بی آر شبر زیدی ملک چھوڑ کر بھاگ گئے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ جماعت اسلامی کے پاس دیانتدار اور شفاف قیادت موجود ہے جن کے پاس کے پاکستان کے تمام مسائل کا حل موجود ہے۔

Facebook Comments