پی کے 71ماشوخیل ، سلیمان خیل ، متنی ، کوہ دامان اور تمام ملحقہ علاقوں میں بجلی کی ناروا لوڈشیڈنگ کی پرُزور مذمت کرتے ہیں۔

مسلسل کئی کئی گھنٹے کی لوڈشیڈنگ نے عوام کی زندگی اجیرن بنادی ہے۔نائب امیر جماعت اسلامی ضلع پشاور وسابق ممبر صوبائی اسمبلی بیرسٹر جاوید خان ۔

0 98

پشاور(جنرل رپورٹ): نائب امیر جماعت اسلامی ضلع پشاور وسابق ممبر صوبائی اسمبلی بیرسٹر جاوید خان مومند نے کہا ہے کہ پی کے 71ماشوخیل ، سلیمان خیل ، متنی ، کوہ دامان اور تمام ملحقہ علاقوں میں بجلی کی ناروا لوڈشیڈنگ کی پرُزور مذمت کرتے ہیں اور مطالبہ بھی کرتے ہے کہ نئے ٹرانسفارمر کی تنصیب کے ساتھ ساتھ گد گورنس کی صورتحال بہتر بنائی جائے ۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے مختلف علاقوں کے ذمہ داران اور معززین کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔ اس موقع پر ماشوخیل ، سلیمان خیل ، متنی اور کوہ دامان کے معززین بڑی تعداد میں موجود تھے۔ اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے بیرسٹر جاوید خان مومند نے کہاکہ گیس اور بجلی کی بدترین لوڈشیڈنگ کی وجہ سے مسجدوں میں پانی ناپید ہے جس کی وجہ سے نمازیوں کو شدید مشکل کا سامنا ہے ۔انہوں نے کہاکہ مسلسل کئی کئی گھنٹے کی لوڈشیڈنگ نے عوام کی زندگی اجیرن بنادی ہے۔شہروں میں 12سے14اور دیہات میں16سے18 گھنٹے تک بجلی غائب رہنامعمول بن چکا ہے۔صنعتیں بند،کاروبار ٹھپ اور مزدور بے روزگاری کے ہاتھوں تنگ آکر خودکشیوں پر مجبور ہیں،کوئی ان کا پرسان حال نہیں۔ انہوں نے حکومت وقت سے اصلاح احوال کا مطالبہ کیا اور کہاکہ حالات کے بگاڑ کی تمام تر ذمہ داری حکومت اور انتظامیہ پر ہوگی۔

Facebook Comments