پشاور کاکشال کی رہائشی خاتون ثمینہ بی بی نے اپنے معذور بیٹے فاروق پر فائرنگ سے زخمی کرنے والوں کے خلاف قانونی کارروائی اور گرفتاری کرنے کےلئے آئی جی پولیس اور دیگر اعلیٰ حکام سے نوٹس لینے کا مطالبہ

0 101

پشاور (جنرل رپورٹ) پشاور کاکشال کی رہائشی خاتون ثمینہ بی بی نے اپنے معذور بیٹے فاروق پر فائرنگ سے زخمی کرنے والوں کے خلاف قانونی کارروائی اور گرفتاری کرنے کےلئے آئی جی پولیس اور دیگر اعلیٰ حکام سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے گزشتہ روز پشاور پریس کلب میں صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے کہا کہ میرا بیٹا فاروق رکشہ ڈرائیور ہے اس دوران انہوں نے ایک سواری کو گل بہار کالونی لے گئے تھے تو اس دوران ربنواز نامی شخص اور خواجہ سرا امجد عرف نینا کے مابین تلخ کلامی ہوئی تو ربنواز نے ہمارے بیٹے پر بلا وجہ فائرنگ کرکے ان کو زخمی کیا جس سے ان کے ایک گردہ ضائع ہوگیا۔ انہوں نے کہاکہ فاروق گھر کا واحد کفیل ہے ان کے علاج تمام جمع پونجی خرچ کی مگر تاحال وہ بیمار پڑا ہے ان کے علاج کےلئے مزید اسطاعت نہیں رکھتے ۔انہوں نے کہاکہ ربنواز کے خلاف پولیس تھانہ تہکال میں رپورٹ درج کی گئی مگر تا حال پولیس کی طرف سے کو گرفتاری نہیں ہوئی انہوں نے آئی جی پولیس خیبرپختونخوا اور دیگر حکام سے ملزم ربنواز کو گرفتار کرنے کی اپیل کرتے ہیں اور ہمیں انصاف فراہم کیا جائے بصورت دیگر ہم آئی جی پولیس آفس اور دیگر مقامات پر احتجاجی مظاہرے دینگے۔۔

Facebook Comments