موٹروے پولیس کے جوانوں نے جان پر کھیل کر اغوا کی کوشش ناکام بناتے ہوئے مغوی کو بازیاب کرا لیا اور دو ملزمان گرفتار کر لیے ۔

0 150

اسلام اباد(بیورو رپورٹ) تفصیلات کے مطابق رمضان نامی شخص جو کہ کراچی کا رہائشی ہے اس کا ملزمان اختر اور عامر سے لین دین کا معاملہ تھا ۔
ملزمان نے رمضان کو اسلام آباد بلایا جس پر رمضان آج صبح کی فلائٹ پر کراچی سے اسلام آباد پہنچا اور ملزمان کے ساتھ بذریعہ موٹر وے روانہ ہو گیا
کچھ دیر بعد رمضان کو ملزمان کی نیت پر شک گزرا اور اس نے پوچھا کہ وہ کہاں جا رہے ہیں لیکن وہ ملزمان کے جواب سے مطمئن نہیں ہوا جس پر رمضان نے گاڑی روکنے کا کہا لیکن ملزمان نے بجائے گاڑی روکنے کے رمضان کا موبائل فون چھین لیا اور اسے زدوکوب کرتے ہوئے اغوا کرنے کی کوشش کی ۔
جب ملزمان موٹروے پر باہتر انٹرچینج کے قریب ، اپنی کارروائی جاری رکھے ہوئے تھے اسی دوران موٹروے پولیس کے چاک و چوبند افسران جن میں سب انسپکٹر اعجاز خان اور سب انسپکٹر منتظر عباس شامل تھے انہوں نے گاڑی میں کچھ غیر معمولی حرکات دیکھی جس پر انہوں نے گاڑی کا پیچھا کیا
پولیس کو آتے دیکھ کر ملزمان نے گاڑی کی رفتار بڑھا لی اور انتہائی غیر محتاط طریقے سے گاڑی بھگاتے رہے ۔
لیکن موٹروے پولیس افسران نے گاڑی کا پیچھا جاری رکھا اور لمحہ بہ لمحہ بدلتی صورتحال کا بیٹ انتظامیہ کو آگاہ کرتے رہے ۔
اس صورتحال کو پیش نظر DSP علاوالدین بیٹ 4 کی سرپرستی میں مذکورہ گاڑی پرقابوپانے کا منصوبہ ترتیب دیا گیا جس میں موٹر وے پولیس کے 4 پٹرولنگ موبائلز نے حصہ لیا ۔اور انتہائی مہارت کے ساتھ مطلوبہ گاڑی کو روکا۔ ملزمان نےموقع سے فرار ہونے کی کوشش کی ۔جس کو موٹروے پولیس افسران نے ناکام بناتے ہوئے دونوں ملزمان کو گرفتار کرلیا اور مغوی رمضان کو حفاظتی تحویل میں لے لیا ۔اس طرح بغیر کسی جانی اور مالی نقصان کے کامیاب حکمت عملی کے نتیجے میں آپریشن پایا تکمیل تک پہنچا۔
بعد ازاں تمام قانونی تقاضے پورے کرنے کے بعد ملزمان کو ضلع پولیس تھانہ صدر واہ کے حوالے کر دیا گیا ۔
ترجمان موٹروے پولیس (موٹروے زون )

Facebook Comments