سابق صدر پرویز مشرف کی اپیل اعتراض لگا کر واپس کر دی گئی۔

0 125

اسلام آباد(بیورو ریپورٹ)؛پاکستان کی سپریم کورٹ نے سابق فوجی صدر پرویز مشرف کی سنگین غداری کیس میں خصوصی عدالت کے فیصلے کے خلاف اپیل اعتراض لگا کر واپس کردی ہے۔عدالتِ عظمیٰ کہ رجسٹرار آفس کا کہنا ہے کے جب تک کویی مجرم خود کو قانون کے سامنے پیش نہ کرے، اپیل دائر نہیں کر سکتا۔رجسٹرار آفس کے مطابق سپریم کورٹ ماضی میں بھی ’پہلے گرفتاری پھر اپیل‘ کا اصول وضع کر چکی ہے۔ حلانکے سابق صدر پرویز مشرف نے تاحال خود کو قانون کے حوالے نہیں کیا ہے۔ایک ماہ تک اگر وہ ان اعتراضات کو ختم کرتے ہیں تو ان کی اپیل کے قابلِ سماعت ہونے کا امکان ہے۔
یاد رہے سابق صدر پرویز مشرف نے خصوصی عدالت سے سزائے موت سنائے جانے کے فیصلے کے خلاف سپریم کورٹ میں اپیل دائر کی تھی۔ پرویز مشرف نے اپیل میں مؤقف اپنایا تھا کہ انہیں شفاف ٹرائل کا حق نہیں دیا گیا اور خصوصی عدالت کی تشکیل بھی غیرآئینی تھی، اس لیے اس کا فیصلہ کالعدم قرار دیا جائے۔

Facebook Comments