جدہ میں مقیم بھارتی کارکن نے خود کُشی کر لی

0 155
جدہ(یواین پی) جدہ میں ایک انتہائی افسوس ناک واقعہ پیش آیا ہے۔ سعودی پولیس کی جانب سے بتایا گیا ہے کہ جدہ میں روزگار کی غرض سے مقیم ایک تارک وطن نے خود کشی کر لی۔ مرنے والے کا تعلق بھارت سے بتایا جا رہا ہے جو کافی عرصے سے روزگار کی خاطر مملکت میں مقیم تھا۔ پولیس کو اطلاع دی گئی تھی کہ جدہ کے علاقے الجوہرہ میں ایک رہائش گاہ میں ایک غیر مُلکی نے خود کو پھندہ لگا لیا ہے۔پولیس کی ٹیم فوری طور پر جائے وقوعہ پر پہنچی تو دیکھا کہ بھارتی کارکن کی لاش ٹین کے شیڈ کی چھت میں ڈالے گئے پھندے سے جھول رہی تھی۔ پولیس کے ماہرین نے جائے وقوعہ کا معائنہ لینے کے بعد اہم شواہد اکٹھے کر لیے۔ ابتدائی تحقیقات کے مطابق بھارتی کارکن نے خود کشی کی ہے۔خود کشی کے اسباب جاننے کے لیے مزید تفتیش کی جا رہی ہے۔ پولیس کے مطابق تفتیش کی جا رہی ہے کہ کہیں یہ کوئی قتل کا واقعہ تو نہیں۔لاش پوسٹ مارٹم کی غرض سے ہسپتال منتقل کر دی گئی ہے۔ رپورٹ آنے کے بعد ہی مزید حقائق سامنے آسکیں گے۔واضح رہے کہ چند روز قبل دُبئی میں روزگار کی غرض سے مقیم ایک بھارتی نوجوان نے ابھی ایک بلڈنگ کی 24 ویں منزل سے کُود کر اپنی زندگی کا خاتمہ کر لیا۔ پولیس کو ایک رہائشی بلڈنگ کے چوکیدار کی جانب سے کال موصول ہوئی کہ بلڈنگ کے گراؤنڈ فلور پر ایک شخص کی خون میں لت پت لاش پڑی ہے۔جب پولیس کی ٹیم موقع پر پہنچی تو پتا چلا کہ مرنے والا نوجوان بھارتی انجینئر ہے جس کی موت اُونچائی سے گرنے کی وجہ سے ہوئی ہے۔ متوفی سبیل رحمان کی عمر 25 سال تھی جو بھارتی ریاست کیرالہ کے شہر مالاپورم کا رہائشی تھا۔ نوجوان کی میت ضروری قانونی کارروائی کے بعد بھارت واپس بھجوا دی گئی ہے۔ ابتدائی طور پر یہ بتایا گیا تھا کہ سبیل رحمان کی موت دل کے دورہ کے باعث ہوئی تھی۔تاہم کلوز سرکٹ ٹی وی کیمروں کی ویڈیوز چیک کی گئی تو اس میں متوفی کو انتہائی بلندی سے زمین پر گِرتے دیکھا جا سکتا تھا۔ چوکیدار نے پولیس کو بتایا کہ متوفی انجینئر نے اُسے کہا تھا کہ وہ 24ویں فلور پر واقع ایک فلیٹ کار ہائشی ہے جس کے بعد چوکیدار نے اُسے فلیٹ کی چابیاں تھما دیں۔ سبیل رحمان نے فلیٹ میں داخل ہونے کے بعد اپنا موبائل فون وہیں رکھا، جُوتے اُتارے اور پھر بلندی پر واقع اس فلیٹ کی بالکنی سے کُود گیا۔ یہ سارا واقعہ رونما ہونے میں صرف 12 منٹ کا وقت لگا۔ پولیس کے مطابق نوجوان نے بلندی سے کُودنے کی خاطر چوکیدار سے جھوٹ بولا تھا۔ وہ اس رہائشی بلڈنگ میں مقیم نہیں تھا۔
Facebook Comments