تحریک انصاف کے تین وزرا صوبائی کابینہ سے برطرف

خیبر پختونخوا حکومت نے عاطف خان، شہرام ترکئی اور شکیل احمد کو صوبائی کابینہ سے برطرف کر دیا

0 116

پشاور(جنرل رپورٹ):صوبہ خیبر پختونخوا کی حکومت نے مبینہ طور پر صوبے کے وزیر اعلٰی محمود خان کے خلاف گروپنگ کرنے کی پاداش میں تین صوبائی وزرا کو کابینہ سے برطرف کر دیا ہے۔
برطرف کیے جانے وزرا میں سینیئر صوبائی وزیر برائے کھیل اور ثقافت محمد عاطف خان، وزیر صحت شہرام خان ترکئی اور وزیر برائے محصولات شکیل احمد شامل ہیں۔
اتوار کو اس حوالے سے جاری کیے گئے ایک نوٹیفیکیشن میں کہا گیا ہے گورنر خیبر پختونخوا شاہ فرمان نے اس حوالے سے سمری پر دستخط کر دیے ہیں اور تینوں وزرا کے قلمدان فی الفور واپس لیے جاتے ہیں۔
پاکستان تحریک انصاف کے سینیئر رہنما اور سینیٹر شبلی فراز کا کہنا تھا کہ وزرا کو فارغ کرنے کی بنیادی وجہ یہ ہے کہ سیاسی جماعت ایک ٹیم کی طرح ہوتی ہے اور اگر اس میں ایسے کھلاڑی موجود ہوں جو مسلسل گروپ بندی کرتے ہوں اور معاملات کو غیر مستحکم کرتے ہوں تو یہ ٹھیک نہیں۔
انھوں نے کہا کہ وزیر اعظم عمران خان پارٹی میں صلاح مشورے کے بعد یہ فیصلہ کیا ہے۔
’عاطف خان خود خیبر پختونخوا کی وزارت اعلیٰ کے منصب کے امیدوار تھے تو شاید وہ ایک ایسا عنصر تھا جس کی وجہ سے وہ غیر ارادی طور پر اس سمت میں جا رہے تھے جس میں ہماری حکومت میں ایک اضطراب سا تھا اور غیر یقینی صورتحال تھی۔‘
یاد رہے کہ چند روز قبل پاکستان میں بعض ذرائع ابلاغ میں خیبر پختونخوا کے وزیراعلیٰ محمود خان اور سینیئر وزیر عاطف خان کے درمیان کچھ معاملات پر اختلافات کی خبریں سامنے آئی تھیں۔

Facebook Comments